پاکستانی روپے کے مقابلے امریکی ڈالر مزید مہنگا ہوگیا

امریکی ڈالر پاکستانی روپے کے مقابلے میں تاریخ کی بُلند ترین سطح پر آگیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق سابق وزیراعظم کی گرفتاری کے بعد امن وامان کی خراب صورتحال، ترسیلات زر کی آمد میں ماہوار بنیادوں پر 13 فیصد کی کمی اور اگلے چند ہفتوں میں آئی ایم ایف سے اسٹاف لیول معاہدہ کے امکانات معدوم ہونے جیسے عوامل کے باعث انٹربینک مارکیٹ میں آج ڈالر کو پَر لگ گئے اور ڈالر کی قدر کے سابقہ تمام ریکارڈ ٹوٹ گئے۔

انٹر بینک مارکیٹ میں امریکی ڈالر 5.46 روپے اضافے سے 295.68 روپے کا ہوگیا۔

بین الاقوامی ریٹنگ کمپنی موڈیز کی جانب سے آئی ایم ایف پروگرام میں عدم شمولیت کی وجہ سے پاکستان کی نادہندگی کے خدشے کی پیشگوئی، آئی ایم ایف کے ساتھ اسٹاف لیول معاہدہ طول اختیار کرنے اور عالمی بینک کی جانب سے مطلوبہ فنڈ کے اجراء کو آئی ایم ایف پروگرام کی بحالی سے مشروط کیے جانے اور ملک میں تبدیل ہوتے ہوئے سیاسی منظرنامے جیسے عوامل کے باعث جمعرات کو چوتھے دن بھی ڈالر کی اونچی پرواز جاری رہی۔

واضح رہے کہ آئی ایم ایف جون تک 3.5 ارب ڈالر کے ایکسٹرنل فنانس گیپ کے خاتمے کا مطالبہ کررہا ہے جسکا انتظام نہ ہونے سے مالیاتی مشکلات بڑھتی جارہی ہیں اور معاہدے میں تاخیر سے نادہندگی کے بادل منڈلارہے ہیں اور یہ عوامل روپے کی تاریخ ساز تنزلی کا باعث بن رہے ہیں۔

Facebook
Twitter
LinkedIn
Print
Email
WhatsApp

Never miss any important news. Subscribe to our newsletter.

آئی بی سی فیس بک پرفالو کریں

تجزیے و تبصرے