آئی ایم ایف، پاکستان کے مابین بیرونی فنانسنگ میں 6ارب ڈالر کرنے پر اتفاق

اسلام آباد: پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان اسٹاف سطع کے معاہدے کے معاملے پر مذاکرات میں اہم پیشرفت ہوئی ہے جس میں آئی ایم ایف اور پاکستان کے درمیان رواں سال بیرونی فنانسنگ 7 ارب ڈالر کے بجائے 6 ارب ڈالر کرنے پر اتفاق ہوا ہے۔

اس پیشرفت کی بنیاد پر وزارت خزانہ نے ایک مرتبہ پھر اگلے دو روز میں آئی ایم ایف کے ساتھ اسٹاف سطع کے معاہدے کی توقع ظاہر کی ہے۔

ذرائع کے مطابق وزارت خزانہ اور دفتر خارجہ کے امریکا اور دیگر ممالک سے رابطوں میں پیشرفت ہوئی۔ وزیر خارجہ اور خزانہ نے آئی ایم ایف کی مشکل شرائط پر دوست ممالک سے مدد کی درخواست کی ہے۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ گزشتہ روز مذاکرات میں وقفے وقفے سے وزیر خزانہ بھی شریک ہوئے جب کہ مذاکرات میں رواں سال بیرونی فنانسنگ سات ارب ڈالر کے بجائے 6 ارب ڈالر کرنے پر اتفاق کیا گیا ہے۔

چین سے 2 ارب ڈالر رول اوور کرنے پر بھی بات ہوئی اور چین کی طرف سے 80 کروڑ ڈالر بھی جلد ملنے کی یقین دہانی کروائی گئی ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ اسٹیٹ بینک اور آئی ایم ایف حکام ترمیم شدہ ایم ای ایف پی پر بات کر چکے ہیں جبکہ اگلے دو دن میں وزارت خزانہ اور آئی ایم ایف ترمیم شدہ ایم ای ایف پی تیار کریں گے۔ نئی ایم ای ایف پی میں گردشی قرض میں کمی کا شیڈول شامل کرنے کا امکان ہے۔

Facebook
Twitter
LinkedIn
Print
Email
WhatsApp

Never miss any important news. Subscribe to our newsletter.

آئی بی سی فیس بک پرفالو کریں

تجزیے و تبصرے