گلوکارہ نسیم بیگم کو بچھڑے34برس بیت گئے

naseem bagumمیٹھی اورسریلی آواز کی مالکہ نسیم بیگم کو آج ہم سے بچھڑے 34 برس بیت گئے ہیں ، لیکن ان
کےیادگار گیتوں کی گونج آج بھی سنائی دیتی ہے ۔1936ء میں امرتسر میں آنکھ کھولنے والی نسیم بیگم نے گلوکاری کی باقاعدہ تربیت کلاسیکل گلوکارہ فریدہ خانم کی بڑی بہن مختار بیگم سے حاصل کی۔فنی کیرئیر کا آغاز 1958ء میں فلم بے گناہ سے کیا۔

1960ء سے 1965ء تک 4 نگار ایوارڈز جیت کر نسیم انہوں نے ملکہ ترنم نور جہاں کے لئے خطرے کی گھنٹی بجا دی۔نسیم بیگم کا گیت ’’ہم بھول گئے ہر بات ‘‘ لتا منگیشکر نے بھارتی فلم سوتن کی بیٹی کے لئے بھی گایا۔

نسیم بیگم کے کئی اور گیت بھی بھارت میں کاپی کئے گئے۔نسیم بیگم کی آواز میڈ اداسی ،کرب اور تڑپ تھی تاہم انہوں نے شوخ و چنچل گانے بھی بڑی مہارت سے گائے۔نسیم بیگم نے 12 سالہ کیرئیر میں جتنے بھی گیت گائے سپرہٹ رہے۔29 ستمبر 1971کو نسیم بیگم اپنے پرستاروں سے ہمیشہ ہمیشہ کیلئے بچھڑ گئی

Facebook
Twitter
LinkedIn
Print
Email
WhatsApp

Never miss any important news. Subscribe to our newsletter.

آئی بی سی فیس بک پرفالو کریں

تجزیے و تبصرے