کوئی ہو نا ہو پاکستان کشمیریوں کیساتھ کھڑا ہے: وزیراعظم عمران خان

وزیراعظم عمران خان نے ایک بار پھر اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ کوئی ہو نا ہو پاکستان اپنے کشمیری بھائیوں کے ساتھ کھڑا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کا اسلام آباد ائیرپورٹ پہنچنے کے بعد استقبال کے لیے آنے والے شرکاء سے خطاب میں کہنا تھا کہ سب سے پہلے قوم کا شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں کہ جس طرح انہوں نے دعائیں تاکہ ہم اپنے کشمیری بھائیوں کا کیس مشکل وقت میں اقوام متحدہ میں لڑ سکیں۔

عمران خان کا کہنا تھا خاص طور پر بشریٰ بی بی کا شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں کہ جنہوں نے میرے لیے بہت دعائیں کیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ ایک جہاد ہے اور ہم کشمیریوں کے ساتھ اس لیے کھڑے ہیں کہ ہم اللہ کو خوش کرنا چاہتے ہیں۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ دنیا کشمیریوں کے ساتھ کھڑی ہو نا ہو لیکن پاکستان کشمیریوں کے ساتھ کھڑا ہے، میں وعدہ کرتا ہوں کہ مودی کی فاشسٹ اور مسلمانوں سے نفرت کرنے والی حکومت کو بے نقاب کروں گا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ بھارتی فوج نے 80 لاکھ کشمیریوں کو کرفیو میں بند کر رکھا ہے، جدوجہد میں اونچ نیچ ہوتی ہے، اچھا وقت بھی آتا ہے اور برا بھی لیکن برے وقت میں مایوس نہیں ہونا کیونکہ کشمیری مائیں، بہنیں اور بزرگ ہماری طرف دیکھ رہے ہیں، کشمیری اپنی جدوجہد جیتیں گے اور کامیاب ہوں گے۔

[pullquote]وزیراعظم کا وطن واپسی پر شاندار استقبال[/pullquote]

وزیراعظم عمران خان گزشتہ روز وطن واپسی کے لیے نیو یارک سے جدہ کے لیے روانہ ہوئے تھے تاہم ان کے طیارے کو فنی خرابی کے باعث واپس نیویارک لینڈ کرا دیا گیا تھا۔

بعدازاں وزیراعظم عمران خان کمرشل ائیر لائن کی پرواز کے ذریعے جدہ پہنچے اور پھر وہاں سے وطن واپسی کے لیے روانہ ہوئے۔

اب وزیراعطم عمران خان سعودی ائیرلائن کی پرواز کے ذریعے اسلام آباد ائیرپورٹ پہنچ چکے ہیں، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی بھی وزیراعظم کے ہمراہ ہیں۔

اسلام آباد پہنچنے پر وزیراعظم عمران خان کا شاندار استقبال کیا گیا اور اس موقع پر سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے۔

وفاقی وزراء، پارٹی رہنماؤں اور کارکنوں کی بڑی تعداد وزیراعظم عمران خان کا والہانہ استقبال کیا اور انہیں پھولوں کے ہار پہنائے۔

وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان، وزیر داخلہ اعجاز شاہ، وزیر ریلوے شیخ رشید، گورنر سندھ عمران اسماعیل، گورنر خیبر پختونخوا اور اسد عمر کے علاوہ کے پی کے کابینہ کے اراکین بھی وزیراعظم کے استقبال کے لیے ائیرپورٹ پہنچے۔

وزیراعظم عمران خان نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں دنیا کے سامنے بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کیا اور مقبوضہ کشمیر سے کرفیو فوری ہٹانے کا مطالبہ کیا۔

وزیراعظم عمران خان نے دنیا کو خبردار بھی کیا کہ اگر دو جوہری ممالک کے درمیان جنگ ہوئی تو پھر اس کے اثرات دنیا بھر تک پھیلیں گے۔

Facebook
Twitter
LinkedIn
Print
Email
WhatsApp

Never miss any important news. Subscribe to our newsletter.

آئی بی سی فیس بک پرفالو کریں

تجزیے و تبصرے