سری لنکن خواتین کی جانب سے گلو کار کو بوسے دینے اور لباس اتارنے پر صدر برہم

مشہور لاطینی پاپ اسٹار انریک اگلیشس کے کانسرٹ کے دوران کچھ خواتین مداحوں کے رویے پر برہم سری لنکن صدر نے کہا ہے کہ شو کے منتظمین کو ‘کوڑوں کی سزا ملنی چاہیے۔’

بی بی سی کے مطابق، صدر متھری پالا سریسینا نے کانسرٹ کے دوران انریک کو بوسہ دینے کیلئے لڑکیوں کے اسٹیج پر چڑھ دوڑنے اور گلوکار پر اپنا زیر جامہ پھینکنے کو ’انتہائی غیر مہذب‘ قرار دیا ہے۔

[pullquote]صدر سریسینا نے بتایا کہ انہیں یہ جان کر بہت دھچکا پہنچا کہ کانسرٹ کے دوران مقامی خواتین نے سر عام اپنے براز اتارے، پاپ اسٹار پر اپنے زیر جامہ پھینکے اور گلوکار کو بوسہ اور گلے لگانے اسٹیج پر پہنچ گئیں۔[/pullquote]

انہوں نے 20 دسمبر کو کولمبو میں ہوئے اس کانسرٹ کے دوران ہوئی حرکات کو ’معاشرے کے خلاف انتہائی غیر مہذب رویہ ‘ قرار دیا۔

’میں یہ تو نہیں کہوں گا کہ ایسا کرنے والی غیر مہذب خواتین کو کوڑے مارے جائیں، لیکن کانسرٹ کے منتظمین کو یہ سزا ضرور ملنا چاہیئے‘۔

56816e5084b29

سری لنکن صدر نے کانسرٹ میں مہنگے ٹکٹوں کی بھی شکایت کی۔ صدر کے بیان پر ردعمل دینے کیلئے شو کے منتظمین سے رابطہ نہیں ہو سکا۔

خیال رہے کہ کولمبو کے ایک رگبی سٹیڈیم میں ہونا والا یہ کانسرٹ لاطینی پاپ سٹار کے ’ لو اینڈ سیکس‘ ورلڈ ٹور کا حصہ تھا۔

Facebook
Twitter
LinkedIn
Print
Email
WhatsApp

Never miss any important news. Subscribe to our newsletter.

مزید تحاریر

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

تجزیے و تبصرے